• Wednesday, 20 October 2021
ٹک ٹاکر ہی قاتل نکلا

ٹک ٹاکر ہی قاتل نکلا

 کراچی(نیا ٹائم ) شہر قائد میں ڈکیتی  مزاحمت  پر قتل کے واقعات میں تشویشناک حد تک اضافہ ہورہاہے،کراچی کے علاقے سچل میں ڈکیتی مزاحمت پرآن لائن بائیک رائیڈر کےقتل کاواقعہ معمہ حل ہوگیا  آن لائن بائیک رائیڈر کاقاتل  ڈکیت گینگ کا اہم کردار ٹک ٹاکر یاور یونس نکلا۔مقتول عمران کو پانچ ہزارکےموبائل کے لیے کس نے اورکیوں قتل کیا؟ اس حوالے سے اہم انکشافات سامنے آئے، قتل سے متعلق ایس ایس پی ایسٹ قمرجسکانی  نے میڈیا سے گفتگو  کرتے ہوئے کہا کہ بائیک رائیڈر عمران کےقتل میں ملوث گروہ چھ رکنی ہے ، پولیس نے قتل میں ملوث ملزم  کامران،عمرفاروق اوریوسف کوگرفتار کر لیا  ہے جبکہ واقعہ کا مرکزی   ملزم  مقتول عمران پر گولی چلانے والا ملزم کامران تھا۔ ایس ایس پی ایسٹ نے بتایا کہ ملزموں  کےمطابق ان کویادہی نہیں وہ کتنی وارداتیں کرچکےہیں، ملزم ٹک ٹاکریاورکی مددسےوارداتیں  کرتے تھے  اورگینگ کو  واردات کے لیےاسلحہ اور موٹرسائیکل یاور  فراہم کرتا تھا، قمرجسکانی   نے کہا کہ یاورکوبدلےمیں ڈکیتی میں سے2حصےملتےتھے، سچل ڈکیتی میں تین موٹرسائیکلوں پرپانچ  ملزم  تھے، کامران پیچھے بیٹھا تھا اور عمرفاروق موٹرسائیکل چلارہاتھا جبکہ بیک اپ پرعابداشرف اورعمران تھے۔ انہوں نے کہا کہ یاور کا کردار صرف سہولتکاری کا تھا، ملزم کامران نےموبائل دیرسےدینےپرعمران کوگولی ماری، کامران کےمطابق وہ پستول کابٹ ماررہاتھاکہ گولی چل گئی، ایس ایس پی ایسٹ قمرجسکانی  نےملزم سکندرگوٹھ اوراطراف کےرہائشی ہیں، ملزموں  سے مقتول عمران کا فون، چھینی ہوئی موٹرسائیکل برآمد کرلی  گئی ہے جبکہ سہولت کار یاوریونس سمیت تین ملزموں کی گرفتاری کے لئے پولیس چھاپے مار رہی  ہے۔

 

خاتون ٹک ٹاکر کیس: ریمبو کے ساتھی گرفتار