• Wednesday, 20 October 2021
وزیر اعظم کیا چاہتے تھے ؟ عامر ڈوگر نے بتا دیا

وزیر اعظم کیا چاہتے تھے ؟ عامر ڈوگر نے بتا دیا

اسلام آباد ( نیا ٹائم ) وزیر اعظم عمران خان کے سیاسی مشیر و قومی اسمبلی میں چیف وہپ عامر ڈوگر کہتے ہیں کہ وزیر اعظم عمران خان کی خواہش تھی کہ سابق آئی ایس آئی چیف لیفٹیننٹ جنرل فیض مزید کچھ ماہ تک اپنے عہدے پر رہیں ۔ نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کے دوران عامر ڈوگر نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان خطے کی موجودہ صورتحال اور افغانستان کے حوالے سے لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید کو مزید کچھ عرصہ تک ڈی جی آئی ایس آئی رکھنا چاہتے ہیں ۔ تاہم وزیر اعظم سمجھتے ہیں کہ لیفٹیننٹ جنرل ندیم انجم اچھے اور پیشہ ور سپاہی ہیں ۔ ان کا کہنا تھا کہ حکومت تمام اداروں کے ساتھ چلنا چاہتی ہے ، وزیر اعظم کی باڈی لینگوئج مثبت اور پر اعتماد تھی ۔ عامر ڈوگر نے مزید کہا کہ وزیر اعظم اور حکومت کے آرمی چیف کے ساتھ مثالی تعلقات ہیں ۔ عامر ڈوگر نے مزید کہا کہ نئے ڈی جی آئی ایس آئی کی تعیناتی کے لیے 3 سے 5 نام وزیر اعظم کو بھجوائے جائیں گے جن میں سے وزیر اعظم نئے ڈی جی آئی ایس آئی کی منظوری دیں گے ۔ عامر ڈوگر نے مزید کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کی کوئی انا نہیں ، وہ ملک کے چیف ایگزیکٹو اور عوامی منتخب نمائندے ہیں ۔ آرمی چیف اور اس آفس کی بھی عزت اور احترام ہے ۔ جس پر کسی صورت حرف نہیں آنا چاہئے ۔ واضح رہے اس سے قبل وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے کہا تھا کہ گزشتہ رات وزیر اعظم عمران خان اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے درمیان طویل ملاقات ہوئی تھی اور نئے ڈی جی آئی ایس آئی کی تعیناتی کے لیے قانونی طریقہ کار اپنایا جائے گا ۔ وفاقی کابینہ اجلاس کے بعد میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا تھا کہ آرمی چیف اور وزیر اعظم کے درمیان قریبی تعلقات ہیں ، وزیر اعظم آفس ایسا کوئی اقدام نہیں اٹھائے گا جس سے فوج یا سپہ سالار کی عزت میں کمی ہو ۔