• Wednesday, 20 October 2021
موٹروے پولیس کےاہلکاروں کی غنڈہ گردی

موٹروے پولیس کےاہلکاروں کی غنڈہ گردی

لاہور(نیاٹائم)فیصل آباد سے لاہور آنے والی فیملی کے ساتھ موٹروے پولیس کے اہلکاروں کی بدکلامی اور دھکے مارنے کاواقعہ سامنے آیاہے۔
تفصیلا ت کے مطابق فیملی کوٹ عبدالما لک سے موٹروے پرانٹر ہونے لگی توٹرک پھنسنے کے باعث موٹروے حکام نے بغیر رسید کے گاڑی کو دوسری سائڈ سےگزر جانے کاکہا۔گاڑی جب راوی ٹو ل پلازہ سے نکلنےلگی توموٹروے اہلکاروں نے40روپے کےبجائے910روپےٹول  مانگا ۔گاڑی سوار فیملی نے جی پی ایس کی مدد سے موٹروے اہلکاروں کو موٹروے پرانٹرہونے کی لوکیشن بھی دکھائی اورکوٹ عبدالمالک ٹول پلازہ پرٹرک کےپھنسنے بارے بھی آگاہ کیا۔لیکن موٹروے اہلکاروں نے ایک نہ سنی اورزبردستی آفس لے گئے،جبکہ موٹروے اہلکار خود واقعہ کی ویڈیو بھی بناتے رہے جب فیملی نے ویڈیو بنانا چاہی تو انکودھکے مارے اورموبائل چھیننے کی کوشش کی۔موٹروے اہلکاروں کی بدمعاشی یہاں ہی کم نہ ہوئی بلکہ 1000روپےوصول کرنے کے بعد بقایا بھی نہ دیا اورایک گھنٹے تک فیملی کوکھڑا رکھا۔
متاثرہ فیملی کامزید کہنا ہے کہ موٹروے پولیس نے جب تصدیق کے لئے کوٹ عبدالمالک ٹول پلازہ والوں سے رابطہ کیا تو انہوں نے بھی گاڑی کواپنی اجازت اورانکے علم میں ہونے کےباعث جانے کی اجازت سے متعلق تصدیق کی۔لیکن موٹروے اہلکار اپنی ہٹ دھرمی پر برقرار رہے،متاثرہ فیملی کا کہنا ہے کہ موٹروے پولیس کے اس روئیے کاسختی سے نوٹس لیا جائے اور ہمیں انصاف فراہم کیاجائے

 

مسیحاؤں کے روپ میں "بھیڑئیے" بے نقاب