• Wednesday, 20 October 2021
مودی سرکار اپنے ہی کسانوں پر ٹوٹ پڑی

مودی سرکار اپنے ہی کسانوں پر ٹوٹ پڑی

اترپردیش(نیاٹائم ویب ڈیسک)انڈین حکومت کی متنازع زرعی پالیسی کے خلاف کسانوں کے احتجاج کے دوران پرتشدد واقعات میں 8 افراد ہلاک اور کئی زخمی ہوگئے ہیں۔
انڈین میڈیا کے مطابق اُترپردیش میں کسانوں کے احتجاج کے دوران حکمران جماعت بھارتیہ جنتہ پارٹی سے تعلق رکھنے والے جونیئر وزیر داخلہ اجے مشرا کے قافلے کی گاڑی مظاہرین پر چڑھ دوڑی جس سے 4 کسان مارے گئے۔
مقامی پولیس کاکہنا ہے کہ واقعے کے بعد مشتعل مظاہرین نے کار کو آگ لگائی جس سے کار میں موجود 4 افراد دم توڑ گئے۔اِس واقعے کے حوالے سے جونیئر وزیر داخلہ اجے مشرا کا کہنا ہے کہ گاڑی ڈرائیور سے بے قابو ہو کر مظاہرین پر چڑھی، ایکسیڈنٹ کے وقت گاڑی میں اگر میرا بیٹا بھی موجود ہوتا تو مظاہرین اسے بھی زندہ نہ چھوڑتے۔اُتر پردیش کے وزیراعلیٰ یوگی ناتھ کا کہنا ہے کہ واقعے کی انویسٹی گیشن جاری ہے۔یاد رہے کہ بھارت کے مختلف حصوں میں کسان حکومت کی زرعی پالیسی کے خلاف متعدد ماہ سے احتجاج کر رہے ہیں جب کہ مودی سرکار کا کہنا ہے کہ حکومت کی زرعی پالیسی کے باعث کسانوں کو فصلوں کی بہترقیمت ملےگی۔