• Saturday, 04 December 2021
مس یونیورس تقریب کا بائیکاٹ کس نے کیا؟

مس یونیورس تقریب کا بائیکاٹ کس نے کیا؟

 

افریقہ(نیا ٹائم ویب ڈیسک) جنوبی افریقہ کی حکومت نے اسرائیل میں منعقد ہونے والے ’مس یونیورس‘ مقابلے میں مس جنوبی افریقہ کی شرکت سے لاتعلقی کااعلان کردیا ہے۔جنوبی افریقہ کی حکومت کی جانب سے ایک بیان میں کہا کہ مس جنوبی افریقہ کے اس مقابلے  میں شرکت کے فیصلے  سے حکومت کا کسی قسم کا کوئی لینا دینا نہیں ہے۔

جنوبی افریقہ کی حکومت نے مس یونیورس مقابلوں کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا کہ فلسطینیوں کے خلاف اسرائیلی مظالم کو ہرگز نظر انداز نہیں کیا جا سکتا۔انہوں نے یونیورسل مقابلے “مس یونیورس”  میں  مس جنوبی افریقہ کی شرکت کے لیے حکومتی حمایت واپس لے لی۔یہ مقابلہ آئندہ ماہ دسمبر کی 12 تاریخ کو اسرائیل کے شہر ایلات میں منعقد ہونے والا ہے۔جنوبی افریقہ میں شدت کے ساتھ یہ مطالبہ کیا جا رہا تھا کہ اسرائیل میں منعقدہ مس یونیورس کے مقابلے کا بائیکاٹ کیا جانا چاہیے۔

واضح رہے کہ میکسیکو کی 26 سالہ آنڈریا میزا نے برازیل اور پیرو کی حسیناوں کو شکست دیتے  ہوئے 2021 کی مس یونیورس کا اعزاز اپنے نام کرلیا۔گزشتہ سال 2020 میں مس یونیورس کا مقابلہ کورونا وائرس کی وجہ سے نہیں ہوسکا تھا۔آنڈریا میزا نے امریکہ کے فلوریڈا میں ہالی ووڈ میں منعقد تقریب میں دنیا بھر کی 70 سے زیادہ حسیناؤں پر سبقت لیتے ہوئے  2021 کے مس یونیورس کا اعزاز حاصل کیا۔ مس میانمار نے اس موقع کو اپنے ملک میں خونریز فوجی بغاوت کی طرف دنیا کی توجہ مبذول کرانے کے لیے استعمال کیا۔حسینہ کائنات کے اس مقابلے میں برازیل کی حسینہ دوسرے اور پیرو کی حسینہ تیسرے نمبر پر رہیں۔ رنگا رنگ ٹیلی ویژن پروگرام کی میزبانی امریکی اداکار ماریو لوپیز اور ٹیلی ویژن کی شخصیت اولیوا کیپیلو نے کی۔

 

پہلی مسلم سُپر ہیرو کون؟ ٹیزر جاری

رابطے میں رہیے

نیوز لیٹر۔

روزانہ کی بڑی خبریں حاصل کریں بذریعہ