• Saturday, 04 December 2021
لاہور کی سڑکوں پر کس کاقبضہ

لاہور کی سڑکوں پر کس کاقبضہ

 

لاہور(نیاٹائم ویب ڈیسک) فضائی آلودگی اورسموگ کی وجہ سے لاہورمسلسل سرفہرست جارہاہےجس سے شہری شدید پریشان دکھائی دیتے ہیں، ماہرین کےمطابق سموگ کے پھیلاؤ کا باعث بننے میں شہر کی سڑکوں کے ڈوائیڈرز کے ساتھ پڑی دھول مٹی کا بھی بنیادی کردارہے ، سرکاری رپورٹ میں شہرکی سڑکوں کے800کلومیٹر ایریاز پر ڈوا ئیڈرز اور فٹ پاتھوں کے ساتھ دھول مٹی کاقبضہ ہے۔

سرکاری رپورٹ کے مطابق لاہور کی 16 سو کلومیٹر سڑکوں میں سے 800 کلومیٹر کی اہم شاہراہوں پر دھول مٹی کومکمل طورپرصاف نہیں کیاجارہا۔ لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کا مکینکل سویپنگ آپریشن تواتر سے نہیں ہورہا جس کی وجہ سے دھول مٹی سڑکوں پر موجود واضح طورپردکھائی دے رہی ہے۔سرکاری اداروں کی عدم توجہی کے باعث سڑکوں پر ڈوائیڈرز کے ساتھ دھول مٹی کی موجودگی ایل ڈبلیوایم سی کی غفلت کی گواہی دے رہی ہے۔سرکاری رپورٹ میں انکشاف ہواہےکہ میکلورروڈ ،بادامی باغ ،فیروز پور روڈ ،جلو مین کنال ،جی ٹی روڈ ،رنگ روڈ ،ملتان روڈ ،ایبٹ روڈ ،مین بلیوارڈ علامہ اقبال پر دھول مٹی کی موجودگی سموگ اور فضائی آلودگی میں اضافے کاسبب بن رہی ہے شہر کی شاہراہوں سے مکینکل سویپنگ نہ ہونے سے مٹی سموگ اور آلودگی کاگراف مسلسل بڑھ رہاہے۔

مین کنال روڈ پرکئی کلو میٹر کے پورشن پر دھول مٹی کی طے جم چکی ہے جبکہ جی ٹی روڈ پر 10 کلو میٹر ایریا جبکہ فیروز پور روڈ پر12کلو میٹر کا ایریا دھول مٹی سے اٹاہواہے۔کچا جیل روڈ اور بند روڈ پر10کلو میٹر تک ایریا دھول مٹی بھرا ہے۔ مین بلیوارڈ گلبرگ، کالج روڈ گورومانگٹ روڈ، علامہ اقبال روڈ اور ایبٹ روڈ پر بھی دھول مٹی کی موجودگی برقرار ہے. ذرائع کے مطابق ایل ڈبلیو ایم سی کے پاس 90 میکنکل سویپنگ ٹریکٹرز ہیں 35میکنکل سویپنگ ٹریکٹرزبغیر ویکیوم کےکام کر رہے ہیں.

دوسری جانب سی ای او ایل ڈبلیو ایم سی کی طرف سے دعوی کیاجارہاہےکہ کمپنی یومیہ 800 کلو میٹر سڑکوں کی مکینیکل واشنگ اور سویپنگ کرتی ہے۔موجودہ وسائل اورمشینری کوحتی الامکان طورپربروئےکار لایاجارہاہے۔لاہورویسٹ مینجمنٹ کمپنی حکام کا کہناہے کہ سڑکوں پر مٹی کی تہیں موجود ہونے پر متعلقہ آفیسر کے خلاف کارروائی ہو گی۔

 

سڑکوں کی تعمیر کیلئے کتنے ارب جاری

رابطے میں رہیے

نیوز لیٹر۔

روزانہ کی بڑی خبریں حاصل کریں بذریعہ