• Wednesday, 20 October 2021
اسلحہ کرائے پر دستیاب ہے

اسلحہ کرائے پر دستیاب ہے

کراچی ( نیا ٹائم ) شہر قائد کے شارع نور جہاں پولیس کی حراست میں موجود 2 انتہائی ملزموں کے انکشافات نے سندھ پولیس کی کارکردگی پر سوالیہ نشان لگا دیا ۔ ایس ایس پی سنٹرل کے مطابق گرفتار ملزموں میں شہریار عرف معصوم بنگالی اور سعید بنگالی شامل ہیں ، ملزموں کے قبضے سے پولیس نے اسلحہ بھی برآمد کیا ۔ ملزم  چند روز قبل اقبال مارکیٹ ، 2 ماہ قبل سرجانی کے ایک گھر میں ڈکیتی میں بھی ملوث تھے ۔ ملزم شہریار عرف معصوم بنگالی حیدر آباد میں 6 کروڑ روپے کی ڈکیتی میں بھی ملوث تھا ۔ جس میں گرفتاری پر ملزم 10 سال سزا بھی کاٹ چکا ہے ، جیل سے باہر آنے کے بعد پھر جرم کی دنیا سے جڑ گیا ۔ ایس ایس پی سنٹرل کے مطابق ملزموں نے دوران تفتیش حیرت انگیز انکشافات کئے ہیں ، ملزموں نے تفتیش کے دوران بتایا کہ وہ سٹی کورٹ کے مال خانے سے اسلحہ کرائے پر لیتے ہیں ، سٹی کورٹ کے مال خانے سے خلیل نامی ساتھی مخصوص مدت کے لیے کرائے پر ملزموں کو اسلحہ لے کر دیتا تھا ۔ خلیل پستول کا کرایہ 8 ہزار روپے ادا کرواتا تھا ۔ ملزموں نے انکشاف کیا کہ کسی واردات میں پکڑے جانے پر خلیل جعلی وکیل بن کر تھانے میں آ کر ان کی رہائی کے لیے جوڑ توڑ بھی کرتا تھا ، ڈکیتی کی کئی وارداتوں میں خلیل بھی ساتھ ہوتا تھا ، مفرور ملزم خلیل بھی جرائم کی دنیا میں نیا نہیں ، وہ اس سے قبل سزائے موت  کے مقدمے سے بری ہو چکا ہے ۔ ملزموں نے انکشاف کیا کہ خلیل کی نشاندہی پر کے الیکٹرک کے افسر کی ریکی بھی کی ، اسی نے سٹی کورٹ میں آنے والے کئی سرکاری افسران کی ریکی کے لیے بھی رشوت دی ۔ ملزموں نے تفتیش میں بتایا کہ ان کے دیگر ساتھی ایم کیو ایم لندن کے ساتھ تعلق رکھتے ہیں ۔ ایس ایس پی سنٹرل کا کہنا ہے کہ گرفتار ملزموں سے مزید تفتیش کی جا رہی ہے ، مفرور ملزم خلیل کی تلاش کی جا رہی ہے جو کار لفٹنگ کی وارداتوں بھی پولیس کو مطلوب ہے ۔